لندن : مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف کا پرویز مشرف کے فیصلے پر تبصرے سے گریز

لندن : (صاف بات) مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف کا پرویز مشرف کے فیصلے پر تبصرے سے گریز

لندن میں سابق وزیراعظم نوازشریف کا رائل برامپٹن اسپتال میں طبی معائنہ کیاگیا۔ اس موقع پر میڈیا سے گفتگو میں شہباز شریف نے بتایا کہ آج نواز شریف کے دل کے ٹیسٹ ہوئے ہیں جب کہ پیرکو دوبارہ پوزیٹرون ایمیشن ٹوموگرافی (پی ای ٹی) اسکین ہوگا۔خصوصی عدالت کی جانب سے سنگین غداری کیس میں پرویز مشرف کی سزا پرقومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کا کہنا تھا کہ فیصلے پر تبصرہ اسے پڑھ کر کروں گا، ابھی نوازشریف کوفیصلے کے بارے میں نہیں بتایا۔اپنی اور اہلخانہ کی جائیدادیں ضبط ہونے کے حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ جائیدادیں ضبط ہونا نیب نیازی گٹھ جوڑ کا نتیجہ ہے،عمران خان چاہے کتنا بھی زور لگا لیں اللہ تعالیٰ ہمارا حامی و ناصر ہے۔ میرے خلاف کرپشن ثابت ہوتی تو قومی احتساب بیورو (نیب) ثبوت سپریم کورٹ میں پیش کرتا۔

ان کا کہنا تھا کہ نواز شریف کی قیادت میں ہم نے ملک کی خدمت کی ہے، پاکستان کی خدمت کے بدلے میں ہمیں جو بھی تکلیف اٹھانی پڑی اٹھائیں گے۔واضح رہے کہ شہباز شریف سابق وزیراعظم نواز شریف کے ساتھ گذشتہ ایک ماہ سے لندن میں موجود ہیں جہاں نواز شریف کا علاج معالجہ جاری ہے۔دوسری جانب اسلام آباد کی خصوصی عدالت نے سابق صدر جنرل (ر) پرویز مشرف کو سنگین غداری کیس میں 5 بار سزائے موت سنائی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں