اسلام آباد:پاکستان میں زرعی پیداوار میں اضافے کے لئے چینی ماڈل ”ایکو فارمنگ” سے غذائی عدم تحفظ پر قابو پانے میں مدد مل سکتی ہے، حکام سی پیک اتھارٹی

اسلام آباد:(صاف بات) پاکستان میں زرعی پیداوار میں اضافے کے لئے چینی ماڈل ”ایکو فارمنگ” سے غذائی عدم تحفظ پر قابو پانے میں مدد مل سکتی ہے، حکام سی پیک اتھارٹی

 پاکستان میں زرعی پیداوار میں اضافے کے لئے چینی ماڈل ”ایکو فارمنگ” کے استعمال کے ذریعے سے ملک میں غذائی عدم تحفظ پر قابو پانے میں مدد مل سکتی ہے ۔ سی پیک اتھارٹی کے حکام کے مطابق سی پیک منصوبہ کے تحت دونوں ممالک “چینی ایکو فارمنگ” کو فروغ دے کر زراعت کے شعبے میں باہمی تعاون کو مزید فروغ دے سکتے ہیں۔خیال رہے کہ چین کا زرعی ایکولوجیکل ماڈل ہائبرڈ بیجوں اوربہتر نظام آبپاشی سے مشروط ہے جبکہ حکومت اس ماڈل کو اس لئے اپنانا چاہتی ہے کر پیداور کی بہتری اور دیگر معاملات میں کسی کمی بیشی کا سامنا نہ ہو۔ چین صرف اپنی10فیصد قابلِ کاشت اراضی کو استعمال میں لا کر اپنی تمام آبادی کے لئے خوراک پیدا کر رہا ہے جو دنیا کی مجموعی آبادی کا 20 فیصد ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں