مالاکنڈ: پی ڈی ایم 19 جنوری کو الیکشن کمیشن آف پاکستان کے سامنے مظاہرہ کرے گی۔مولانا فضل الرحمن

ملاکنڈ: (صاف بات) پی ڈی ایم کے جلسے خطاب کے دوران انہوں نے کہا کہ صوبوں کے عوام اور ان کے حقوق کے ساتھ کھڑے ہیں۔انہوں نے تحریک انصاف کی حکومت کو مخاطب کرکے کہا کہ اس حکومت نے کرپشن کے دروازے کھول رکھے ہیں اور قومی احتساب بیورو (نیب) کو یہ نظر نہیں آتا۔مولانا فضل الرحمٰن نے کہا کہ تمھارا اقتدار اسرائیل، بھارت، قادیانیوں کے پیسوں سے ہے اور پھر کہتے ہو کہ تم محب وطن ہو۔انہوں نے کہا کہ پی ڈی ایم، اسلام آباد میں 19 جنوری کو الیکشن کمیشن کے دفتر کے سامنے مظاہرہ کرے گی۔ان کا مزید کہنا تھا کہ 21 جنوری کو کراچی میں اسرائیل نامنظور کے لیے ملین مارچ انعقاد کریں گے۔مولانا فضل الرحمٰن نے کہا کہ اس سے پہلے عوام تمھارے اقتدار کی کشتی غرق کردے، چند دن باقی ہے خود استعفیٰ دے کر چلے جاؤ۔

ان کا کہنا تھا کہ آئین اور صوبوں کے حقوق کے خلاف سازشیں ہورہی جبکہ معیشت پشاور میں بی آر ٹی کی طرح تباہ ہوگئی ہے۔انہوں نے کہا کہ آج اسلام آباد میں بھی امن نہیں رہا اور اس حکومت میں لاقانیت اتنی بڑھ گئی کہ دن کی روشنی میں نوجوان لڑکے پر گولیاں برسادیں گئیں۔مولانا فضل الرحمن نے کہا کہ ہم خون کی سیاست نہیں مانتے لیکن ہم، آپ کو آپ کی ذمہ داری کا احساس دلانا چاہتے ہیں۔قبل ازیں پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ ملاکنڈ کے ہر شہری کا ایک ہی مطالبہ ہے کہ سلیگٹڈ چلا جائے جو ملک کا معاشی بحران میں دھکیل رہا ہے جبکہ کٹھ پتلی، سلیکٹڈ راج کا خاتمہ اور جمہوریت بحال کریں۔انہوں نے کہا کہ ملاکنڈ کے عوام نے آج پاکستان کو اپنا فیصلہ سنا دیا۔بلاول بھٹو زرداری نے حکومت پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہا کہ تبدیلی کا نعرہ لگانے والے سارے دھوکے باز ہیں جنہیں حکومت چلانی نہیں آتی لیکن تبدیلی کا نعرہ لگا کر عوام کو دھوکا دیا۔انہوں نے ملاکنڈ کے عوام کو گواہ بنا کر کہا کہ ’کٹھ پتلی اور سلیکٹڈ راج کا خاتمہ کریں گے اور حقیقی جمہوریت بحال کریں گے‘۔

اپنا تبصرہ بھیجیں