کوئٹہ: وزیراعظم عمران خان چھوٹا سا طبقہ ملک کے وسائل پر قبضہ کر کے بیٹھا ہے، وزیر اعظم عمران خاں

کوئٹہ:(صاف بات) وزیراعظم عمران خان نے ایک تقریب کے دوران کہنا تھا کہ اللہ تعالیٰ اس کو عزت دیتا ہے جو دنیا کے لئے کچھ کرتا ہے، کامیابی اور عزت اللہ کی طرف سے ملتی ہے ، دنیا ان لوگوں کو یاد کرتی ہے جو انسانیت کیلئے کچھ کرکے جاتے ہیں، لیکن ماضی میں ہمارے حکمرانوں نے اس ملک کا نہیں سوچا، ایک چھوٹا سا طبقہ ملک کے وسائل پر قبضہ کر کے بیٹھا ہے، ہمارے حکمرانوں نے لندن کے امیر ترین علاقوں میں جائیدادیں لیں، لندن کے ان علاقوں میں جائیدادیں لیں جہاں برطانوی وزیراعظم بھی نہیں لے سکتا، مدینہ کی ریاست میں ترقی کا ماڈل یہ تھا کہ انھوں نے محلات نہیں بنائے، پاکستان اس وقت ترقی کرے گا جب نچلا طبقہ اوپر آئےگا۔

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ ماضی میں بلوچستان کی ترقی پرتوجہ نہیں دی گئی اور یہ صوبہ پیچھے رہ گیا، خوشی ہے کہ ہم نے بلوچستان میں ترقیاتی منصوبوں کو شروع کیا، ڈھائی سالوں میں 3300 کلو میٹر سڑکوں کے منصوبے بنے اور ان پر کام شروع کیا، چمن، کوئٹہ اور کراچی شاہراہ بہت خطرناک ہے، میں نے اس پر سفر کیا ہوا ہے، 2013 میں جب حکومت آئی تھی تو خیبر پختونخوا کے حالات خراب تھے، دہشت گردی کے باعث پولیس اہلکار شہید ہو رہے تھے، سب سے زیادہ نقصان خیبر پختونخوا کو ہوا، لیکن پھر ہم نے خیبر پختونخوا میں غربت میں کمی کی۔

عمران خان نے کہا کہ تین چار سال مخالفین کہتے رہے کہاں ہے نیا پختونخوا اور نیا پاکستان، 2018 کےالیکشن میں ہمیں پختونخوا میں دو تہائی اکثریت ملی اور اس کی وجہ یہی تھی کہ وہاں غربت میں کمی آئی، یو این ڈی پی کی رپورٹ کے مطابق کے پی میں سب سے تیزی سےغربت کم ہوئی، تمام صوبوں کو ہیلتھ انشورنس دے رہے ہیں، ہیلتھ کارڈ کے ذریعے کسی بھی اسپتال سے علاج کرایا جاسکتا ہے، کسانوں کو کسان کارڈ کے ذریعے سبسڈی دی جائے گی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں