معاون خصوصی فردوس عاشق اعوان نے اسلام آباد ہائیکورٹ سے معافی مانگ لی.

 معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے اسلام آباد ہائيکورٹ سے تحریری معافی مانگ لی، اپنے جواب میں ان کا کہان تھا کہ خود کو عدالت کے رحم وکرم پر چھوڑتی ہوں۔

 معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے توہین عدالت کیس میں اسلام آباد کی عدالت عالیہ سے تحریری طور پر غیر مشروط معافی مانگی۔

بیرسٹر قاسم نواز عباسی کے ذريعے ہائيکورٹ ميں جمع کرائے گئے جواب ميں کہا سابق وزيراعظم نواز شریف کی اپیل پر اثر انداز ہونے کی کوشش نہیں کی، نہ ایسی نیت تھی، اگر مقدمے پر اثرانداز ہونے کا تاثر ملا تو اس پر بھی معافی مانگتی ہوں۔

فردوس عاشق اعوان نے يہ بھی کہا کہ ملک کی ہر عدالت اور ججز کا بے حد احترام کرتی ہوں اور عدلیہ کی آزادی پر یقین رکھتی ہوں، توہين عدالت کيس ميں اپنے آپ کو عدالت کے رحم و کرم پر چھوڑتی ہوں.چيف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ اطہر من اللہ نے زبانی معافی کو ناکافی سمجھتے ہوئے معاون خصوصی کو تحریری جواب جمع کرانے کی ہدايت کی تھی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں