اسلام آباد:حکومت نے بلاک چین ٹیکنالوجی اور کرپٹو کرنسی کو ریگولرائز کرنے کا منصوبہ شروع کر دیا۔شبلی فراز

اسلام اباد:(صاف بات) وفاقی وزیر سائنس اینڈ ٹیکنالوجی شبلی فراز کا کہنا ہے کہ حکومت کرپٹو کرنسی کو ریگولرائز کرنا چاہتی ہے، اسٹیٹ بینک، ایس ای سی پی اور خزانہ ڈویژن اس پر کام کر رہے ہیں، شفافیت اور احتساب کیلیے بلاک چین ٹیکنالوجی پر کام کر رہی ہے، وزارت سائنس کی ماتحت یونیورسٹیوں میں بلاک چین ٹیکنالوجی پائلٹ منصوبہ شروع کیا جائے گا۔

بلاک چین سمٹ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وزارت نے ٹیکنالوجی کے استعمال کی طرف جانے کے لیے اہم اقدام اٹھائے ہیں۔ ای وی ایم بنائی اور سائنس انوویشن پالیسی بنائی۔ بلاک چین 2024 تک 20 ارب کی مارکیٹ بن جائے گی۔انھوں نے کہا کہ 200 کے قریب ممالک کسی نہ کسی طرح اپنے سسٹم میں بلاک چین کو شامل کر چکے ہیں، بینک بلاک چین کو استعمال کر کے 8 سے 10 ارب سالانہ بچا سکتے ہیں، اس ٹیکنالوجی کے استعمال سے ووٹنگ شفاف ہو سکتی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں