نصیر آباد:غیرجمہوری دورمیں اپوزیشن کونشانہ بنایا جارہاہے، سلیکٹڈ کو جمہوری طریقے سے ہرانا ہوگا۔ بلاول بھٹو

نصیر آباد:(صاف بات) بلاول بھٹو کا جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہنا تھا کہ ہم نے اعلان جنگ کردیا ہے اب عمران خان کے گھبرانے اور حساب دینے کا وقت آگیا ہے۔چیئرمین پیپلزپارٹی کا کہنا تھا کہ آپ نے عوام کے حقوق پر ڈاکا ڈالا ہے،حکومت پر عوام کا اعتماد اٹھ چکا ہے اب پارلیمان کا اعتماد بھی اٹھنا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ غیرجمہوری دورمیں اپوزیشن کونشانہ بنایا جارہاہے، سلیکٹڈ کو جمہوری طریقے سے ہرانا ہوگا۔بلاول بھٹو کا کہنا تھا کہ نوجوان نسل پیپلزپارٹی میں شامل ہورہی ہے ہم مل کر عوام کو ان کے حقوق دلوائيں گے اور عوام کی مشکلات میں کمی لانے کی کوشش کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ قائد عوام کا نعرہ تھا مانگ رہا ہے ہر انسان روٹی،کپڑا اور مکان مگر آج کپتان عوام سے روٹی،کپڑا اور مکان چھین رہا ہے۔چیئرمین پیپلزپارٹی کا کہنا تھا کہ حکومت ملی تو پانی کا مسئلہ سب سے پہلے حل کريں گے، سندھ کو پانی ملے گا تو بلوچستان کو پانی ملے گا، حق کا مطالبہ کرنا اور چھيننا دونوں جانتے ہيں۔انہوں نے کہا کہ سندھ ميں عوام کا مفت علاج کراسکتا ہوں تو بلوچستان ميں بھی کرسکتا ہوں، ہم نے بلوچستان کو مالی وسائل کا مالک بنایا، سندھ اور بلوچستان میں پانی کی قلت برداشت کررہے ہیں، اپنا حق نہ ملے تو چھیننا بھی جانتے ہیں۔بلاول بھٹو کا کہنا تھا کہ پیپلزپارٹی نے ہر دور میں غربت کا مقابلہ کیا مگر جب سے سلیکٹڈ حکومت آئی ہے مہنگائی اور غربت میں اضافہ ہوا ہے، پیپلزپارٹی کی سوچ ہے کہ ملک بھر میں ترقی ہونی چاہیے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں