اسلام آباد:داخلی سیاسی حالات کو او آئی سی پر اثر انداز نہیں ہونے دینگے، اعلامیہ متحدہ اپوزیشن

اسلام آباد:(صاف بات) متحدہ اپوزیشن کی جانب سے جاری اعلامیے میں اسلامی دنیا کے وزرائے خارجہ، مندوبین اور دیگر شخصیات کی آمدکا خیر مقدم کیا ہے۔اعلامیے میں کہا گیا ہےکہ معزز مہمانوں کی آمد ہمارے لیے باعث افتخار ہے، او آئی سی مہمانوں کی موجودگی کے دوران خوش گوار ماحول کے لیے کردار یقینی بنائیں گے، ایسی فضا کے لیے بھرپور حصہ ڈالیں گے جس میں معزز مہمان اپنے امور پوری توجہ سے انجام دے سکیں۔اعلامیے کے مطابق او آئی سی کے معزز مہمانوں کی تکریم کے لیے متحدہ اپوزیشن نے لانگ مارچ کی تاریخوں میں تبدیلی کی، معزز مہمانوں کی تکریم کے لیے متحدہ اپوزیشن نےکارکنان کو 25 مارچ سے پیشتر اسلام آباد نہ آنےکی ہدایت کی ہے۔

اعلامیے میں کہا گیا ہےکہ پاکستان کے داخلی سیاسی حالات اور سیاسی کشمکش کو اوآئی سی پر اثر انداز نہیں ہونے دیا جائےگا، امیدکرتے ہیں کہ معزز مہمان اچھی یادیں لے کر وطن واپس تشریف لے جائیں گے۔خیال رہے کہ پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہےکہ قومی اسمبلی کے اسپیکر اسد قیصر پیر کے دن عدم اعتماد پیش نہیں کرتے تو ہم ایوان سے نہیں اٹھیں گے اور دیکھتے ہیں آپ او آئی سی کی کانفرنس کیسےکرتے ہیں؟ ہم وہاں اسی فلورپربیٹھے رہیں گے جب تک ہمارا حق نہیں دیا جاتا۔اپوزیشن لیڈر شہباز شریف نے بھی بلاول کے اعلان کی تائید کرتے ہوئے ایوان میں دھرنےکا اعلان کیا ہے، ان کا کہنا ہے کہ اجلاس بلانا اسپیکرکی ذمہ داری ہے، اگر اسپیکر نے ہاؤس کا بزنس نہ چلایا تو ہم اسمبلی ہال میں دھرنے دینے پر مجبور ہوں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں